دروش میں آگ لگنے سے دو مارکیٹیں جل گئیں۔ 53 دکانیں، تین گاڑیاں، دو موٹر سائکل اور کروڑوں کا سامان جل کر خاکستر۔

گل حماد فاروقی

چترال(گل حماد فاروقی) چترال سے 45 کلومیٹر دور تاریحی قصبے دروش میں گزشتہ رات تین بجے کے قریب اچانک لنڈا مارکیٹ میں آگ بھڑک اٹھی جس نے فوری طور پر پوری مارکیٹ کو اپنے لپیٹ میں لے لیا۔ آگ کے شعلے اتنے پھیل گئے  کہ قریب میں سپیئر پارٹس کی مارکیٹ بھی جل کر راکھ بن گیَ ۔یا۔ آگ لگنے کی وجہ سے 53 دکانیں، تین گاڑیاں اور دو موٹر سائکلوں سمیت کروڑوں روپے مالیت کا سامان جل کر خاکستر ہوگیا۔

عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ آگ صبح تین بجے کے قریب لگ گئی جو اتنی تیز تھی کہ مختصر وقت میں پوری مارکیٹ جل گئ۔ ۔ مارکیٹ کے قریب تین مکانات بھی جل گئے۔ دوسری جانب اڈہ کے اندر سپئر پارٹس کی مارکیٹ تھی  اسے بھی آگ لگ گئی جس میں کروڑوں روپے مالیت کا سامان مکمل طور پر جل کر خاکستر ہوگیا۔

متاثرہ لوگوں نے حکومت سے اپیل کی ہے کہ ان کے ساتھ مالی مدد کی جائے تاکہ وہ دوبارہ اپنا کاروبار شروع کرکے اہل حانہ کیلئے رزق حلال کماسکے۔واضح رہے کہ جس لنڈا بازار مارکیٹ میں آگ لگ گئی تھی اس میں بجلی بھی نہیں ہے۔ 

مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ آگ اتنی شدت کی تھی کہ چترال، دروش کے علاوہ پڑوسی ضلع دیر بالا سے بھی فائر بریگیڈ بلایا گیا۔جس پر صبح چھ بجے قابو پالیا گیا تاہم اس وقت تک آگ نے سب کچھ جلا کر راکھ کر ڈالا تھا۔ دریں اثناء چترال ٹاؤن میں دنین کے مقام پر آفاق سکول میں بھی جمہ کے روز علی الصبح اچانک آگ لگ گئی جس کے نتیجے میں سکول کے کئی کمروں کو نقصان پہنچا۔ چونکہ  آگ سکول کھلنے سے پہلے لگی تھی جس کی وجہ سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا متاثرین نے حکومتی اداروں سے امداد کی اپیل کی ہے۔ 

X